October 22nd, 2021 (1443ربيع الأول16)

جتنی تیزی سے بدی کی قوت پھیل رہی ہے،اتنی ہی تیزی کے ساتھ ہمیں نیکی پھیلانی ہوگی۔عائشہ سید 

ڈائریکٹر شعبہ تعلقات عامہ جماعت اسلامی پاکستان و سابق ممبر قومی اسمبلی عائشہ سید نے صوبہ شمالی پنجاب کے ایگزیکٹو اجلاس میں صوبے سے آئی ہوئی تمام اضلاع کی نگران خواتین سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کسی کو دین کی دعوت دینے سے پہلے خود کو دعوت دیں،اور تیزی سے نیکیوں کو پھیلائیں ۔۔
 انہوں نے کہا کہ جماعت اسلامی کا مقصد نیک اور باکردار لوگوں کو عوام سے منتخب کروا کر اسمبلیوں میں پہچانا ہے۔  اسمبلی میں جو بل پیش کئے جا رہے ہیں انہیں روکنے کے لئے ایک ایسی عوامی قیادت کا ہونا ضروری ہے جو  قرآن و سنت کی روشنی میں بل بنائے اور انہیں پاس کرے۔ موجودہ حکومت  قادیانی لابی کو متحرک کرنے کے ساتھ ساتھ  قرآن و سنت کے خلاف بل پیش کررہی ہے۔جن میں سر فہرست 18 سال سے کم عمر میں شادی پر پابندی،گھریلو تشدد بل اور اب 18 سال سے کم عمر افراد پر مذہب کی تبدیلی پر پابندی۔۔ عوام نے جماعت اسلامی کا ساتھ دے کر اس کے نمائندوں کو اسمبلیوں میں نہ پہنچایا تو کوئی بھی اس  سیلاب کو روک نہیں پائے گا ۔
ایگزیکٹو اجلاس میں ناظمہ صوبہ پنجاب شمالی ثمینہ احسان،ان کی نائبین رخسانہ غضنفر،کوثر پروین،نزہت بھٹی،وائس پریزیڈنٹ تعلقات عامہ نائلہ سید،سیکریٹری اطلاعات تعلقات عامہ پاکستان شبانہ ایاز،اور دیگر خواتین بھی موجود تھیں۔
ایگزیکٹو اجلاس سے اختتامی خطاب کرتےہوئے ناظمہ صوبہ شمالی پنجاب جماعت اسلامی ثمینہ احسان نے کہا کہ
دعوت دین  کی ذمہ داری  انبیاء علیہ السلام اور نبی ﷺ کے بعد اب امت محمدیہ کی ہے اور ہم سب کو  اس فریضہ کو ادا کرنا ہے۔ دعوت دین کا سب سے اہم فریضہ برائی سے روکنا اور نیکی کو پھیلانا ہے ۔جماعت اسلامی الحمدللہ ایک باکردار اور دیانت دار قیادت پر مشتمل جماعت یے۔عوام  جماعت اسلامی کے لوگوں کو منتخب کرکے اسمبلیوں میں بھیجیں،تاکہ ہمارا اسلامی جمہوریہ پاکستان ترقی کی راہ پر گامزن ہو سکے ۔